مقدمات کے فیصلوں میںکسی دباؤ اور خوف کا شکار نہیں ہوں گے، نامزد چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار

مقدمات کے فیصلوں میںکسی دباؤ اور خوف کا شکار نہیں ہوں گے، نامزد چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار

نامزد چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے کہا ہے کہ مقدمات کے فیصلوں میںکسی دباؤ اور خوف کا شکار نہیں ہوں گےاور نہ مصلحت سے کام لیں گے، آپ دیکھیں گے کہ شفافیت کیا ہوتی ہے ۔لاہور ہائی کورٹ بار کی تقریب سے خطاب میں نامزد چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ قیاس آرائی کی جاتی ہے کہ فیصلوں میں مصلحت اور مفاد شامل ہوتا ہے،وہ فرائض کی سرانجام دہی میں قطعا ًکمزور نہیں پڑیں گے ، عدلیہ کی طرف کوئی آنکھ اٹھاکر نہیں دیکھ سکے گا۔انہوں نے کہا کہ شارٹ کٹ وقتی فائدہ دیتے ہیں منزل تک نہیں پہنچاتے ، ہم مصلحت ، مفاد اور خوف کا شکار نہیں ہوں گے۔تقریب سے خطاب میں جسٹس ثاقب نثار کا مزید کہنا تھا کہ پہلے جج اپنا گھر ٹھیک کریں ، پھر بار سے توقعات رکھیں ۔ بار عہد کرے اب کوئی ہڑتال نہیں ہو گی ۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*