وزیراعظم کےنئےوکیل مخدوم علی خان نےنوازشریف کی عوامی عہدوں کی تفصیلات جمع کرادیں

وزیراعظم کےنئےوکیل مخدوم علی خان نےنوازشریف کی عوامی عہدوں کی تفصیلات جمع کرادیں

سپریم کورٹ میں پاناما پیپرز کیس کی سماعت کے دوران وزیراعظم کےنئےوکیل مخدوم علی خان نےنوازشریف کی عوامی عہدوں کی تفصیلات جمع کرادیں۔جسٹس آصف سعید کھوسہ نے استفسار کیاکہ قطری شہزادے کا خط کارروائی سے نکالا تو وزیراعظم کے بچوں کے مؤقف کی حیثیت کیا ہو گی؟پاناما پیپرز کیس میں پی ٹی آئی کے وکیل نعیم بخاری نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ حسن نواز نے ایک انٹرویو میں کہا تھاکہ لندن میں ، میں کرائے کے فلیٹس میں رہتا ہوں، حسن نوازنےانٹرویو میں کہا کہ میں کماتا نہیں بلکہ عام طالبعلم کی طرح رہتا ہوں۔نعیم بخاری نےمزید کہا کہ مریم انٹرویو میں کہتی ہیں کہ والد کے ساتھ رہتی ہوں ، بیرون ملک تو درکنار پاکستان میں بھی کوئی جائیداد نہیں۔نعیم بخاری نے اپنے دلائل میں کہا کہ وزیر اعظم نے کہاتھا کہ بچوں کو کاروبار کے لیے پیسا 2006 میں دیا جبکہ حسین نواز نے کہاان کی3آف شورکمپنیاں ہیں، حسین نواز نے کہا تھا کہ مریم نواز نیلسن اورنیسکول کی ٹرسٹی ہیں۔عمران خان کے وکیل کا کہنا تھا کہ سرمایہ کاری کے بارے میں والد کچھ اور اولاد کچھ اور کہتی رہی، قطر میں سرمایہ کاری سے لگتا ہے نئی جائیدادیں خریدی گئیں، قطری خط مکمل طور پر فراڈ ہےجبکہ وزیراعظم کے کسی بیان میں قطری خط کا کوئی ذکر نہیں، ساری جائیداد دادا سے ایک پوتے کو منتقل نہیں ہو سکتی۔جسٹس کھوسہ کا کہنا تھا کہ قطری خط وزیراعظم کےبچوں کےموقف کی تائیدمیں لکھا گیا،اگر خط نکال دیا تو وزیراعظم کے بچوں کے موقف کی حیثیت کیا ہو گی؟

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*