پاکستان اسٹیل کا مجموعی خسارہ 400 ارب روپے سے بھی تجاوز کرگیا

پاکستان اسٹیل کا مجموعی خسارہ 400 ارب روپے سے بھی تجاوز کرگیا

پاکستان اسٹیل کا مجموعی خسارہ 400 ارب روپے سے بھی تجاوز کرگیا۔ گزشتہ3 برسوں سے اکاونٹس کا آڈٹ نہیں کرایا گیا ، اثاثوں کی بنیاد پر اکاؤئنٹس اپ ڈیٹ کردئیے گئے ۔حکومت نے پاکستان اسٹیل کو فروخت کرنے یا کرائے پر دینے کے لئے بھی تیار ہے، اس سلسلے میں پہلے چینی اسٹیل کمپنی کی ٹیم نے دورہ کیا جس کا مثبت جواب نہ آیا۔اب ایرانی اسٹیل کمپنی کی تکنیکی ٹیم پاکستان اسٹیل کے تمام پیداواری یونٹس اور سسٹم کا تفصیلی جائزہ لے رہی ہے، ٹیم ایران واپس جاکر اپنے ماہرین کو رپورٹ پیش کرے گی۔ذرائع کے مطابق پاکستان اسٹیل کا مجموعی خسارہ 415 ارب روپے تک جاپہنچا ہے جس میں 200 ارب روپے کے نقصانات اور 215 ارب روپے کے قرضے اور دیگر واجبات شامل ہیں۔جس میں نیشنل بینک اور دیگر بینکوں پر قرضے اور سود کی مد میں 61 ارب روپے ،گیس کے بل کی مد میں 40 ارب اور گریجیوٹی کی مد میں 40 ارب روپے ادا کرنے ہیں ۔ذرائع کے مطابق 30 جون 2014 کو آخری آڈٹ رپورٹ بنی تھی، جس کے بعد اثاثوں کی بنیاد پر ہی اکانٹس اپ ڈیٹ کردئیے گئے

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*