سندھ، پنجاب اور خیبر پختونخوا کا وفاقی دارالحکومت سے زمینی رابطہ ختم

سندھ، پنجاب اور خیبر پختونخوا کا وفاقی دارالحکومت سے زمینی رابطہ ختم

پی ٹی آئی کا دھرنا 2 نومبر کو ہے لیکن انتظامیہ نے پہلے ہی اسلام آباد جانے والے ہر راستے بند کر دیے ہیں۔ سندھ، پنجاب اور خیبر پختونخوا سے اسلام آباد جانے والا ہر راستہ بند ہے۔ ایک دن پہلے کھولی گئی پشاور اسلام آباد موٹروے آج دوبارہ کنٹینر، مٹی اور ریت کے ڈھیر لگا کر بند کر دی گئی۔ اطلاعات کے مطابق اٹک میں جی ٹی روڈ بھی بند ہے جبکہ حسن ابدال کے شاہیا پل اور واہ گارڈن پل کو بھی نوانٹری پوائنٹ بنا دیا گیا ہے۔ صادق آباد کے قریب سندھ کو پنجاب سے ملانے والی قومی شاہراہ پر بھی کنٹینر رکھ دیے گئے ہیں۔ فیصل آباد موٹر وے بھی بند کر دی گئی ہے جبکہ گوجرانوالہ جی ٹی روڈ پر بھی کنٹینر موجود ہیں۔ ادھر لاہور میں ہنگامی صورت حال سے نمٹنے کے لیے سی ایم ہاؤس اور ماڈل ٹاؤن کے باہر درجنوں کنٹینرز رکھ دیے گئے ہیں۔دوسری جانب موٹر وے اور جی ٹی روڈ کی بندش سے عوام کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ خواتین اور بچوں کے ساتھ مسافر سامان اٹھا کر کئی کئی کلومیٹر پیدل چلتے رہے۔ راولپنڈی میت لے جانے والوں کو بھی راستہ نہ مل سکا۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*