پنجاب میں سول ایڈمنسٹریشن آرڈیننس 2016ء کی منظوری

پنجاب میں سول ایڈمنسٹریشن آرڈیننس 2016ء کی منظوری

پنجاب کابینہ نے پرانا کمشنری نظام بحال کرتے ہوئے نئے بلدیاتی نظام سول ایڈمنسٹریشن آرڈیننس 2016ء کی منظوری دیدی ہے،اب ضلعی سطح پر ڈی سی او کی جگہ ڈپٹی کمشنر لے لیں گے،نیا نظام 2جنوری 2017ء سے نافذ العمل ہوگا ۔وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی زیرصدارت ہونے والے کابینہ اجلاس میں صوبائی وزرا، مشیر، معاونین خصوصی، چیف سیکرٹری اور متعلقہ حکام شریک ہوئے ۔اجلاس میں نئے بلدیاتی نظام سول ایڈمنسٹریشن آرڈیننس 2016ء کی منظوری دی گئی ،جس کے بعد بلدیاتی حکومتوں کوصوبائی مالیاتی کمیشن ایوارڈ2016ء کے تحت 391ارب روپے ملیں گے ۔وزیر اعلیٰ شہباز شریف نے کہا کہ بلدیاتی حکومتوں کو بااختیار اور مالیاتی خود مختاربنائیں گے جب کہ وہ جوابدہ بھی ہوگی۔انہوں نے مزید کہا کہ ترقیاتی فنڈ کسی اور مد میں استعمال کرنے پر پابندی ہوگی۔یاد رہے کہ پنجاب پولیس کے 35سابق آئی جیز نے سول ایڈمنسٹریشن آرڈیننس 2016 ءکی تیاری پر سخت تشویش کا اظہارکیا تھا ۔ان کا کہنا تھا کہ آرڈیننس کا مقصد بلدیاتی اداروں کے سربراہوں کے اختیارات کم کرنا ہے، پنجاب کی بیوروکریسی غیرقانونی طور پر پولیس کا کنٹرول لینا چاہتی ہے ۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*