سائبر حملوں کا الزام، امریکا نے 35 روسی سفارت کار ملک بدر کردیے

سائبر حملوں کا الزام، امریکا نے 35 روسی سفارت کار ملک بدر کردیے

امریکہ نے صدارتی انتخاب میں روس کی جانب سے سائبر حملوں کے الزام میں 35 روسی سفارت کاروں کو ملک بدر کر دیا ہے جبکہ روس نے ایسی کسی بھی کارروائی میں ملوث ہونے کی تردید کرتے ہوئے امریکی فیصلے کو غیر محتاط قرار دیا ہے۔اور جوابی کارروائی کی بھی دھمکی دی ہے۔تفصیلات کے مطابق دونوں ملکوں کے تعلقات میں پیدا ہونے والے کھچاؤ کی وجہ سے میری لینڈ اور نیویارک میں واقع دو روسی کمپاؤنڈز کو بھی بند کر دیا جائے گا جو مبینہ طور پر اپنے ملک کے لیے خفیہ معلومات اکھٹی کرنے پر مامور ہیں۔امریکہ نے نو اداروں پر پابندیاں بھی عائد کر دی ہیں جن میں دو روسی انٹیلیجنس ایجنسیاں جی آر یو اور ایف ایس بی بھی شامل ہیں۔کریملین کے ترجمان نے ماسکو میں صحافیوں کو بتایا کہ صدر ولا دی میر پوتن ان اقدامات پر جوابی کارروائی کرے گا۔ مسٹر دمتری پسکو کا کہنا ہے کہ کہ یہ اقدامات غیر قانونی اور غیر محتاط ہیں اور انھیں ناقابلِ یقین اور اشتعال انگیز خارجہ پالیسی قرار دیا ہے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*