سڈنی:تیسرے ٹیسٹ پہلی اننگ ابتدائی نقصان کے بعد یونس اوراظہر کی ذمے دارانہ بیٹنگ

سڈنی:تیسرے ٹیسٹ پہلی اننگ ابتدائی نقصان کے بعد یونس اوراظہر کی ذمے دارانہ بیٹنگ

سڈنی: پاکستان نے آسٹریلیا کے خلاف تیسرے ٹیسٹ میچ میں ابتدائی نقصان کے بعد یونس خان اور اظہر علی ذمے دارانہ بیٹنگ کی بدولت دو وکٹ کے نقصان پر 126 رنز بنا لیے ہیں۔پاکستان نے سڈنی میں اپنی پہلی اننگز شروع کی تو پہلا میچ کھیلنے والے شرجیل خان صرف چار رنز بنانے کے بعد پویلین لوٹنے پر مجبور ہو گئے۔شرجیل خان کے بعد آنے والے بلے باز با بر  اعظم بغیر کسے رنز کے ہیزل وڈ کی گیند پر وکٹیں گنوانی پڑیں۔چھ رنز پر دو وکٹیں گرنے کے بعد پاکستانی ٹیم صورتحال سے دوچار تھی لیکن یونس خان اور اظہر نے ذمے دارانہ بیٹنگ کرتے ہوئے ٹیم کو مشکلات سے نکالا۔دونوں کھلاڑیوں نے آخری سیشن میں آسٹریلین ٹیم کو وکٹ سے محروم رکھا اور دن کے اختتام تک اسکور کو 126 رنز تک پہنچا دیا۔ جب کھیل ختم ہوا تو اظہر 57 اور یونس 64 رنز پر کھیل رہے تھے۔پاکستان کو آسٹریلیا کی پہلی اننگز کا اسکور برابر کرنے کیلئے اب بھی 412 رنز درکار ہیں جس نے پہلی اننگز 538 رنز آٹھ کھلاڑی آؤٹ پر ڈکلیئر کردی تھی۔ تیسرے ٹیسٹ میچ کی دوسرے دن کی صبح آسٹریلیا نے تین وکٹ کے نقصان پر 365 رنز سے کھیل کا آغاز کیا تو میٹ رینشا اور پیٹر ہینڈز کومب وکٹ پر موجود تھے۔چوتھی وکٹ کیلئے 142 رنز کی اس شراکت کا خاتمہ اس وقت ہوا جب رینشا 184 رنز بنانے کے بعد عمران خان کی میچ میں پہلی وکٹ بنے۔ہلٹن کارٹ رائٹ اور ہینڈز کومب نے 93 رنز کی شراکت قائم کر کے پاکستان کی مشکلات میں مزید اضافہ کیا لیکن پہلا میچ کھیلنے والے بلے باز 37 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہو گئے۔دوسری جانب ہینڈز کومب نے اپنی سنچری مکمل کی، وہ 110 رنز بنانے کے بعد وہاب ریاض کی گیند پر بلا وکٹ پر مار بیٹھے۔اظہر علی نے میتھیو ویڈ اور مچل اسٹارک کو آؤٹ کر کے دو وکٹیں اپنے نام کیں،پاکستان کی جانب سے وہاب ریاض تین وکٹیں لے کر سب سے کامیاب باؤلر رہے جبکہ اظہر اور عمران نے دو دو وکٹیں لیں۔ یاسر شاہ کو ایک وکٹ کے بدلے 147 رنز کی پٹائی برداشت کرنا پڑی۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*