فلوریڈاکےائیرپورٹ پرفائرنگ کرکےپانچ افرادکوہلاک کرنےوالا سابق امریکی فوجی نکلا

فلوریڈاکےائیرپورٹ پرفائرنگ کرکےپانچ افرادکوہلاک کرنےوالا سابق امریکی فوجی نکلا

فلوریڈاکےائیرپورٹ پرفائرنگ کرکےپانچ افرادکوہلاک کرنےوالا سابق امریکی فوجی نکلا۔ اندھادھندفائرنگ کرنیوالےملزم اسٹیبان سینٹیاگوپر داعش کی خاطر لڑنے کے لیے دباؤ ڈالے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔امریکی میڈیا کے مطابق فائرنگ کاواقعہ ریاست فلوریڈا کے ہالی ووڈ انٹرنیشنل ایئرپورٹ کےٹرمینل ٹوپرپیش آیا جہاں اسٹاروارزکےکرداروں جیسے کپڑےپہنے دہشت گرداسٹیبان سینٹیاگو نے فائرنگ کی ۔ملزم الاسکاسےفلوریڈاآیاتھااورجہاز میں مسافروں سےبھی اسکاجھگڑاہواتھا۔دہشت گردنے لاونج میں پہنچنےکےبعدباتھ روم جاکرپستول لوڈکیااورباہرآکراچانک لوگوں کے سروں کانشانہ لےکرگولیاں برسانا شروع کردیں اورپھرخود کوپولیس کے حوالے کردیا۔ملزم کاتعلق نیوجرسی سے ہےتاہم اسکا حالیہ پتہ فلوریڈاکےعلاقے نیپلزسےبتایاگیاہے۔ بیگیج ایریا میں فائرنگ سے بھگدڑمچ گئی اور ٹرمینل کوخالی کرالیا گیا ۔فائرنگ کے واقعے کے بعد ایئرپورٹ پر ہر قسم کا فلائٹ آپریشن عارضی طورپر روک دیا گیا ۔پولیس اور ریسکیو ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں اور 5 لاشوں اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیاگیا۔برطانوی میڈیاکےمطابق ملزم کی عمرچھبیس برس ہے۔وہ امریکی فوج میںرہ کرچکاہےاورعراق میں بھی خدمات انجام دی تھیں۔اس کےپاس فوجی شناختی کارڈبھی تھا۔اسٹیبان سینٹیاگو الاسکا میں ایف بی آئی کےدفتربھی جاچکاہےجہاں اس نے دعویٰ کیا تھاکہ اس پر دباوڈالاجارہاہےکہ وہ داعش کی خاطرلڑے۔یہ واضح نہیں ہوسکا کہ داعش کےلیے لڑنے سےمتعلق یہ دباؤاس پرکون ڈال رہاتھا۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*