دنیا میں کینسر سے ہر روز22 ہزار افراد ہلاک ہوجاتے ہیں

دنیا میں کینسر سے ہر روز22 ہزار افراد ہلاک ہوجاتے ہیں

دنیا میں یو میہ 38ہزارافراد مختلف اقسام کے کینسر میں مبتلا جبکہ 22ہزار ہلاک ہو رہے ہیں۔ڈبلیو ایچ او کی انٹرنیشنل ایجنسی فار ریسرچ آن کینسر،امریکن کینسر سوسائٹی اوریونین فار انٹرنیشنل کینسر کنٹرول کی مشترکہ طور پر تیار کردہ کینسر اٹلس میں دیئے گئے 2012 کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق پاکستان میں سالانہ ایک لاکھ48ہزار افراد سرطان کے مرض میں مبتلا ہو رہے ہیں جبکہ اس سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد ایک لاکھ سے زائد ہے۔

ملک میں سب سے زیادہ 23فیصد تشخیص ہونے والا کینسر چھاتی کا ہے۔یوں ملک میں خواتین میں کینسر خصوصاً چھاتی کے سرطان کی شرح خطرناک حد تک زیادہ ہے۔ملک میں تشخیص ہونے والے کینسر کے کل کیسز میں57فیصد84ہزار سے زائد خواتین میں تشخیص ہو رہے ہیں۔

ان میں40فیصد شرح چھاتی کے سرطان کی ہے ۔کینسر سے ہونے والی خواتین کی31فیصد اموات کی وجہ بھی چھاتی کا سرطان ہے جبکہ مجموعی طور پر ملک میں کینسر سے52ہزار خواتین ہلاک ہوتی ہیں۔ ملک میں سرطان کی سب سے زیادہ ہلاکتیں بھی چھاتی کے کینسر کے باعث ہو رہی ہیں۔جو کل ہلاکتوں کا16فیصد ہے ۔

ملک میں دوسرے نمبر پر8.6فیصد منہ کا کینسر تشخیص ہوتا ہے جو7.2فیصد ہلاکتوں کا سبب بنتا ہے۔تیسرے نمبر پر پھیپھڑوں کے سرطان سے5.9فیصد اموات واقع ہوتی ہیں جبکہ تشخیص کی شرح4.6فیصد ہے ۔دنیامیں سالانہ ایک کروڑ40لاکھ افراد سرطان میں مبتلا ہو رہے ہیں۔

سب سے زیادہ پھیلنے والا سرطان پھیپھڑوں اور چھاتی کا ہے۔25فیصد افراد ان ہی دو اقسام کے سرطان کا شکار ہوتے ہے۔13فیصد پھیپھڑوں اور12فیصدمیں چھاتی کا سرطان تشخیص ہورہا ہے۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ دنیا میں تشخیص ہونے والے سرطان کے کل کیسز میں سے نصف کے قریب بھارت،چین سمیت دیگر مشرقی اور وسطی ایشیائی ممالک میں تشخیص ہورہے ہیں۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*