دماغی معذور بچوں کے لیے روبوٹک سوٹ تیار

دماغی معذور بچوں کے لیے روبوٹک سوٹ تیار

امریکی ریسرچرز نے دماغی طور پر معذور بچوں کیلئے روبوٹک سوٹ تیار کرلیا ہے جو انہیں خود سے چلنے میں مدد دیگا۔

امریکی ریاست شمالی کیرولائنا کے نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ہیلتھ کلینیکل سینٹر کے محققین کے تیار کردہ اس ایکزو اسکیلیٹن روبوٹک سوٹ کی مدد سے سریبل پالسے سے متاثرہ بچے پہلی بار بغیر کسی کا سہارا لئے نہ صرف کھڑے ہو سکیں گے بلکہ چل پھر بھی سکیں گے۔امریکی ریسرچرز کا اپنی اس نئی تحقیق اور روبوٹک سوٹ کے حوالے سے کہنا تھا کہ اس سوٹ کی مدد سے نہ صرف پٹھوں کا سہارا ملے گا بلکہ جسمانی جوڑکو حرکت دینے میں مدد ملے گی جبکہ اسکے طویل استعمال سے بچے کسی مدد کے بغیر خود سے چل سکیں گے۔

محققین کے مزید کہنا تھا کہ ہم نے سریبل پالسے سے متاثرہ 5 سے 19 سال کے 7 بچوں پر مشتمل گروپ پر تقریبا8 سے 12 ہفتوں تک اس روبوٹک سوٹ کا تجربہ کیا جس کے استعمال سے بچوں میں خاطر خواہ بہتری دیکھی گئی اور یہ ایک عارضی حل ہے ہم چاہتے ہیں کچھ ایسا طریقہ کار لایا جائے کہ ایسے بچے بغیر اس روبٹک سوٹ کے چل پھر سکیں۔واضح رہے سریبل پالسے ایک ایسی دماضی بیماری ہے جس کی وجہ سے بچوں کے پٹھے کمزور ہوجاتے ہیں اور وہ اپنے جسم کو حرکت دینے سے محروم ہوجاتے ہیں۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*